میرے چاروں طرف افق ہے جو ایک پردہء سیمیں کی طرح فضائے بسیط میں پھیلا ہوا ہے،واقعات مستقبل کے افق سے نمودار ہو کر ماضی کے افق میں چلے جاتے ہیں،لیکن گم نہیں ہوتے،موقع محل،اسے واپس تحت الشعور سے شعور میں لے آتا ہے، شعور انسانی افق ہے،جس سے جھانک کر وہ مستقبل کےآئینہ ادراک میں دیکھتا ہے ۔
دوستو ! اُفق کے پار سب دیکھتے ہیں ۔ لیکن توجہ نہیں دیتے۔ آپ کی توجہ مبذول کروانے کے لئے "اُفق کے پار" یا میرے دیگر بلاگ کے،جملہ حقوق محفوظ نہیں ۔ پوسٹ ہونے کے بعد یہ آپ کے ہوئے ، آپ انہیں کہیں بھی کاپی پیسٹ کر سکتے ہیں ، کسی اجازت کی ضرورت نہیں !( مہاجرزادہ)

فیس بک کے دیوانے

پیر، 2 مارچ، 2015

مراقبہ پر رسپانس !

میں نے فیس بک کے دوستوں ، کے مشورے پر جب انہیں مراقبے کے بارے میں بتانے کا پروگرام بنایا تو فروری 2014 میں پہلا مضمون ،

" مراقبہ آپ کی سوچ سے زیادہ آسان ہے" ۔
لکھا تو اچھا رسپانس نہیں تھا تو میں اسی سلسلے کے دوسرے مضامین پر متوجہ ہوگیا جس میں سب سے اہم ،
" زندگی کا فن" 
ہے ۔ یہ ایک کتاب، "زندگی کا فن"  سے انسپائر ہو کر میں نے اپنے الفاظ میں ترجمہ کرنا شروع کی ہے ۔

پھرسال بعد مجھے پرسنل ونڈو پر میسج آیا کہ آپ نے مراقبہ پر لکھنا بند کیوں کر دیا ، مجھے اِس میں دلچسپی ہے ۔


تب میں نے دوسرا مضمون ، " توانائی ، روشنی کا مرکز " لکھا اور بلاگ پر پوسٹ کر دیا جس کو پڑھنے والوں کے رسپانس نے میرا حوصلہ بڑھایا  ، کیوں کہ یہ اِس ہفتے کے پسندیدہ مضامین میں شامل ہو چکا تھا ۔
یہ پڑھنے والے ہی ہیں جو لکھاری کو مزید لکھنے پر مجبور کرتے ہیں ۔ چنانچہ تیسرا مضمون ، لکھا ، تو وہ بھی
پسندیدہ مضامین میں شامل ہو چکا تھا ۔
پھر پرسنل ونڈو پر پیغام آئے ،
" میں نے مراقہ کرنے میں دلچسپی رکھتا ہوں اور اِس بارے میں کافی پڑھا ہوا ہے ، مجھے مراقبہ کرنے کا طریقہ بتا دیں "
تو میں نے ، "
مراقبہ کرنے والوں کے لئے ۔ طریق کار" کے بارے میں ، پی ڈی ایف فائل لوڈ کر دی،  جو میرا ارادہ سب سے آخر میں کرنے کا تھا ۔ اور  بال میں مضمون بھی ڈالا ہے ۔ جس کا لنک نیچے درج ہے ۔


مراقبہ- طریق کار ۔روشنی کا سفر

 
مراقبہ کی کوشش کرنے والوں سے درخواست ہے کہ ، آپ مراقبے کے مضامین جو ابھی جاری ہیں لازمی پڑھیں اور " زندگی کا فن" مضامین پر نظر ڈالیں ۔ تاکہ انسانی دماغ اور قدرت کی کاریگر برائے تخلیق کے بارے میں آگاہی ہو ۔ 



 ٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭
 

خیال رہے کہ "اُفق کے پار" یا میرے دیگر بلاگ کے،جملہ حقوق محفوظ نہیں ۔ !

افق کے پار
دیکھنے والوں کو اگر میرا یہ مضمون پسند آئے تو دوستوں کو بھی بتائیے ۔ آپ اِسے کہیں بھی کاپی اور پیسٹ کر سکتے ہیں ۔ ۔ اگر آپ کو شوق ہے کہ زیادہ لوگ آپ کو پڑھیں تو اپنا بلاگ بنائیں ۔